Home / سو مشہور پاکستانی / Asma Jahangir Biography in Urdu

Asma Jahangir Biography in Urdu

 

عاصمہ جہانگیر

معروف قانون دان  اور آزادئ نسواں و انسانی حقوق کی علمبردار عاصمہ جہانگیر 27 جنوری  1952  کو لاہور میں پیدا ہوئیں۔ ان کے والد ملک غلام جیلانی  معروف سیاست دان تھے۔  عاصمہ جہانگیرنے  1968میں سینیر کیمبرج کرنے کے بعد  1989 کنیرڈ کالج لاہور  میں داخلہ لیا ۔  صدر ایوب خان کے خلاف  عوامی تحریک اٹھی  تو انہوں نے بھی کالج کی طالبات کا  ایک جلوس نکالا  اور اس کی قیادت کی  ، جس کی پاداش میں انہیں چند ماہ کے لیے کالج سے باہر

نکال دیا گیا

ایل ایل بی ڈگری

عاصمہ جہانگیر 1978نے   میں ایل ایل بی کی ڈگری حاصل کرنے بعد بنیادی انسانی حقوق اور تحفظ  ِ نسواں کے لیے 1980  میں اپنی جدو جہد کا  آغاز کیا  اور  پنجاب ویمن لائیرز ایسو سی ایشن قائم کی۔

وومن ایکشن فورم

عاصمہ جہانگیر  وومن ایکشن فورم  کی مجلسِ عملہ کی رکن ، بار ایسو سی ایشن کی   رکن اور سڈنی ( آسٹریلیا)  کی تنظیم  لا ء اایشیا کی کونسل کی رکن رہیں ۔

Defence For Children International

عاصمہ جہانگیر  1986 سے  1988  تک جنیوا کی عالمی تنظیم  ڈیفنس فار چلڈرن انٹرنیشنل کی نائب رہیں۔  اس کے علاوہ  ایشیا پیسیفک فورم برائے خواتین  و قانون و ترقی  کی رکن رہیں ۔ علاوہ ازیں  بین الاقوامی مرکز  برائے انسانی حقوق  و جمہوریت  کینیڈ کی ڈائریکٹر رہیں ۔  اس کے ساتھ ساتھ پنجاب بار ایسوسی ایشن  کی مجلسِ عامہ کی رکن رہیں  اور          جساتھ ہی ساتھ انسانی حقوق کمیشن پاکستان کی صدر رہیں

عاصمہ جہانگیر کی ساری زندگی  آمریت  اور انسانی حقوق کی خلاف ورزیوں کے خلاف  جدو جہد کرنے میں گزری  جس کو پاکستان سمیت ساری دنیا میں ۔سراہا گیا۔  عاصمہ جہانگیر کو  1995  میں صدرِ مملکت کی جانب سے  ستارہ امتیاز سے نوازا گیا

. ایوارڈ بھی دیا گیا   Marton Aenelz Award اس کے علاوہ  انہیں حقوقِ انسانی کے تحفظ کا

بچوں کی مشقت ، ان کی جبری ملازمت اور تحریکِ نسواں کے موضوع پر ان کے مقالات شائع ہوتے رہے۔

عاصمہ جہانگیر 11 فروری 2018  کو لاہور کے حمید لطیف ہاسپٹل میں فوت ہوئیں ۔

admin

Author: admin

One comment

  1. Avatar

    بہت ہی اچھی ویب سائٹ ہے ہم لوگ…..🌹

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے