Home / ادب نامہ / شاعری / بچپن کی یادیں

بچپن کی یادیں

شاعرہ: ڈاکٹر کومل رزاق

 

بچپن کی یادیں سہانے تھے دن
محبت بھرے فسانے تھے دن

 

پکی تھی یاری سچی تھی آنکھیں
تجھے بھی مجھے دکھانے تھے دن

 

دل میں کوئی روگ نہ تھے
آنگن میں کوئی سوگ نہ تھے

 

وعدے بھلانا چھوڑ کے جانا
ایسے ویسے لوگ نہ تھے

 

بس اب تو کچی یادیں ہیں
جھوٹی یہ سب باتیں ہیں

 

گرتے ہیں سب نظروں سے
پھرتے ہیں سب وعدوں سے

 

اب دل میں ہیں روگ بہت
آنگن میں ہیں سوگ بہت

 

کومل وہ دن بیت گئے
یہ ہارے وہ جیت گئے

 

 

 

admin

Author: admin

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے