Home / خبریں / لاپتہ افراد کے لواحقین سے معاہدہ ہو گیا

لاپتہ افراد کے لواحقین سے معاہدہ ہو گیا

وزیراعلی بلوچستان جام کمال نے اور مسنگ پرسن لواحقین کے درمیان ۲ ماہ کا معاہدہ ہو گیاہے۔وزیراعلی بلوچستان جام کمال کی صوبائی وزیرداخلہ ضیالانگو کے ہمراہ پریس کانفرنس میں مسنگ پرسن لواحقین سے ملاقات کی ۔پریس کانفرنس میں انہوں نے کہا مسنگ پرسن کے حوالے سے بلوچستان کے لوگ کٹھن دور سے گزر رہے ہیں۔بلوچستان کی متعدد پارٹیوں نے اسکو ایجنڈے میں شامل کیا۔ہم نے کہا تھا ہم اس مسئلے کے حل کیلئے ہر حد تک جائیں گے،انہوں نے کہا ماضی کی حکومتوں کی طرح ہم بھی دلاسوں سے کام لے سکتے تھےجبکہ ہم نے سنجیدگی سے اس معاملے پر غور کیا۔

اس حوالے سے وزیراعظم عمران خان کی جانب سے بھی مثبت جواب ملا۔مسنگ پرسنز کے کیمپ میں بیٹھے ہوئے لوگوں سے ٓاج ملاقات ہوئی،لاپتہ افراد کے حوالے ست تمام سٹیک ہولڈر سے بات کریں گے،ان کے لواحقین کا ہمارے پاس ٓانا تعجب کی بات نہیں ہونا چاہیئے۔انہون نے کہا بطور وزیراعلی کوشش ہے کہ مسنگ پرسن کا مسئلہ حل ہو،اس کیلئے میں نے مسنگ پرسن خاندانوں سے وقت مانگا ہے،ہم یقین دلاتے ہیں کہ ان کو خوش خبریاں ملیں گی اور ہم کوئی پوائنٹ سکورنگ بھی نہیں کر رہے ہیں۔

اس موقع پر وائس فارمسنگ پرسن بلوچ کے چیئرمین نصراللہ بلوچ کا کہنا تھا کہ ہمارا مطالبہ ہے مسنگ پرسن مسئلہ کو ملکی قانون کے مطابق حل کیا جائے۔اگرکوئی قصور وار ہے تو عدالتوں میں پیش کیا جائے،وزیرداخلہ نے مسئلے کی یقین دہانی کرائی ہے جس پر ہمیں خوشی ہے اسکا کہنا تھا کہ اس کے بعد ۱۱ افراد گھروں کو پہنچ چکے ہیں۔وزیراعلی نے ۲ ماہ کا وقت مانگا ہے ہمیں امید ہے صوبائی حکومت مسئلہ حل کرے گی۔

ماما قدیربلوچ کا کہنا تھا کہ ہم کئی سالون سے احتجاجی کیمپ لگائے بیٹھے ہیں مگر ہر حکومت نے اپنی سیاست چمکائی عملی اقدامات کسی نے نہیں کئے۔انہون نے کہا جام کمال نے مسئلے کو سنجیدگی سے لیا ہے امید ہے اب یہ مسئلہ حل ہو گا اور یہ اعلان بھی کیا کہ وزیراعلی جام کمال کی یقین دہانی پر ۲ ماہ تک احتجاج نہیں کریں گے اور ہم امید کرتے ہیں یہ مسئلہ حل ہو گا۔

 

admin

Author: admin

Check Also

انڈین میڈیا کی گھناؤنی حرکت بےنقاب

بھارتی میڈیا کا ایک اور جھوٹ بے نقاب ہوگیا، بھارت نے جان بوجھ کر پھر …

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے